حضرت محمدﷺ کا بتایا ہوا وظیفہ پڑھ لیا کریں رزق کا دروازہ ایسا کھلے گا کہ کبھی بند نہیں ہوگا

آج ہم آپ کیلئے رزق کی تنگی دور کرنے کیلئے وافر مقدار میں رزق پانے کیلئے ایک وظیفہ لیکر حاضر ہوئے ہیں۔یہ وظیفہ حضرت محمدﷺ کا بتایا ہوا وظیفہ ہے اور صحابہ کرام ؓ کا آزمایا ہوا وظیفہ ہے ۔ ایک مرتبہ حضرت عثمان غنی ؓ حضرت عبداللہ ابن مسعود ؓ کے گھر انکا حال جاننے کیلئے گئے ۔ حضرت عبداللہ ابن مسعود ؓ اتنے زیادہ بیمار تھے ۔ زندگی اور موت کے درمیان جنگ لڑ رہے تھے ۔

حضرت عثمان غنی ؓ نے حال جان لیا تو جاتے وقت دو عشرفیوں کی تھیلیاں دینے لگے تو تھیلیاں دیکھ کر حضر ت عبداللہ ابن مسعود ؓ فرمانے لگے یہ تم کیا کررہے ہو اس پر حضرت عثمان غنی ؓ نے فرمایا تمہاری زندگی کی ضروریات اس سے یہ لے لو یہ دیکھ یہ سن کر حضرت عبداللہ ابن مسعود ؓ مسکرانے لگے اور کہنے لگے میں تو زندگی کی ضروریات سے چھٹکارہ پانے لگا ہوں میرے یہ کس کام آئیں گی ۔ تمہارے بعد تمہاری بیٹیوں کے کام آئیں گے ۔ تمہاری صرف بیٹیاں ہیں ان کیلئے وافر ہیں۔ حضرت عبداللہ ابن مسعود ؓ فرمانے لگے یہ تھیلیاں لے جاؤ ایسے شخص کو جس کو اس کی ضرورت ہے میری بیٹیوں کو انشاء اللہ ان اشرفیوں کی ضرورت نہیں پڑے گی ۔ میری بیٹیاں ہر روز سورۃ واقعہ کی تلاوت کرتی ہیں وہ سورۃ واقعہ کی عامل ہیں میں نے حضرت محمدﷺ سے خود سنا آپ نے وعدہ کیا ہے

سورۃ واقعہ پڑھنے والے کو کبھی بھی فاقہ نہیں آئے گا۔حضرت عبداللہ ابن مسعود ؓ کا جو ایمان تھا کیا ہمارا وہ ایمان نہیں ہوسکتا ۔ ہم جھوٹے عاملوں پیروں کے پاس بھاگتے ہیں۔اس کے بجائے قرآن پاک کو کھول کر دیکھیں اللہ تعالیٰ نے کیا کیا موتی بکھیرے ہوئے ہیں۔ آپﷺ نے قرآن پاک میں موجود ایسے ایسے عمل بتادیے ہیں اگر وہ کریں کبھی بھی رزق کی تنگی نہیں آئیگی مشکل آفت پریشانی مصیبتیں نہیں آئینگی ۔ سورۃ واقعہ ہر روز ایک مرتبہ پڑھنا اپنی زندگی کا معمول بنالیں۔اللہ تعالیٰ آپ کیلئے ایسے رزق کے دروازے کھولے گا کبھی بند نہیں ہونگے ۔ اللہ تعالیٰ ایسی جگہ سے رزق عطاء فرمائے گا کہ کبھی آ پ نے سوچا نہیں ہوگا۔ وہ غفور ورحیم ہے اس نے رزق دینے کا وعدہ کیا ہوا ہے ۔

ہم غافل ہوگئے ہیں اللہ تعالیٰ سے مانگنے کی بجائے ہم جھوٹے پیروں سے مدد مانگتے ہیں ۔ہم اللہ تعالیٰ سے مانگیں گے انشاء اللہ وہ بہت غفور رحیم ہے لوگوں کے پاس ہاتھ پھیلانے سے سوائے ذلت ورسوائی سے کچھ نہیں ملتا۔ اللہ تعالیٰ کے آگے ہاتھ پھیلانے سے عزت بھی ملتی ہے رزق بھی ملتا ہے سکون بھی ملتا ہے ۔ ہر روز ایک مرتبہ سورۃ واقعہ پڑھنا اپنی زندگی میں معمول بنالیں۔ خود پڑھ لیں یا گھر میں کوئی ایک افراد بھی پڑھ لے تو کافی ہوجائیگا۔ انشاء اللہ ساری زندگی رزق کی تنگی نہیں آئیگی یقین کریں جس دن عمل شروع کریں گے اسی دن سے آپ کے کاروبار میں برکت شروع ہوجائیگی ۔ ایسی برکت ہوگی کبھی بھی ختم نہیں ہوگی ۔

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *