صرف 3 بار پینا ہے وہ شخص جو چل نہیں سکتا بھاگنے لگے گا۔

زیادہ تر کیسز میں بیماریوں کا علاج کافی سادہ ہوتا ہے لیکن آج کی میڈیکل سائنس نے بیماریوں کو کافی مشکل بنادیا ہے بات کریں ہمارے پرانے زمانے کے یا پرانی میڈیکل سائنس کی یا نیچرل طریقے سے علاج کی تو اس میں توساری بیماریوں کا علاج سادہ کسی ایک ہی چیز سے کیاجاتا تھا اور وہ بیماری جڑ سے ختم ہوجاتی تھی اور اگر آپ اپنی بیماریوں کا علاج نیچرل طریقےسے کرتے ہیں تو اس کے لئے آپ کو ہر بیماری کا علاج آپ کو اپنے گھر کے کچن میں پڑی چیزوں سے مل جائے گا یا یوں

کہہ لیجئے کہ جتنی چیزیں لونگ الائچی میتھی دانہ پیاز لہسن ادرک یہ سب چیزیں ایک میڈیسن کا ہی کام کرتی ہیں انہی چیزوں کو استعمال کرکے ہم اپنے جسم کی ساری بیماریوں کو ختم کرسکتے ہیں کہیں آپ کو باہر سے کوئی چیز لانے کی ضرورت ہی نہیں ہے آپ کو ہر بیماری کا علاج آپ کے گھر کے کچن سے ہی مل سکتا ہے تو اگر تو آپ نیچرل نسخوں کے ذریعے اپنا علاج کریں گے تو آپ سبھی اپنے آپ میں ڈاکٹر بن سکتے ہیں

لیکن اگر آپ آج کل کی میڈیکل سائنس کے ذریعے اپنی بیماریوں کا علاج کریں گے تو آپ کو مارکیٹ میں ملنے والی دوائیوں کا کچھ سمجھ میں ہی نہیں آئے گا پھر چاہئے آپ کتنے ہی پڑھےلکھے کیوں نہ ہوں آپ بیماریوں کو سمجھ ہی نہیں پائیں گے دوائیوں کے اندر کای سالٹ ہے آپ انہیں بھی نہیں سمجھ پائیں گے اور آپ کو یہ پتہ تک نہیں چلے گا کہ یہ ڈاکٹر آپ کا علاج کر کیسے رہا ہے لیکن اگر آپ اپنی بیماریوں کا علاج پرانے طریقے سے یعنی نیچرل طریقے سے کرواتے ہیں تو آپ یہ سمجھ بھی پائیں گے کہ آپ کو ریمیڈی دی کیا جارہی ہے اور اس کا اثر کس طرح سے ہوتا ہے اسے کوئی بھی سمجھ سکتا ہے یعنی کوئی ان پڑھ بھی ہو تو وہ بھی سمجھ سکتا ہے اسی لئے اگر آپ نیچرل طریقے سے علاج کرتے ہیں تو آپ خود بھی ایک ڈاکٹر ہی ہیں یعنی کہ نوے فیصد بیماریاں ایسی ہیں جو ہر انسان خود ہی ٹھیک کرسکتا ہے صرف دس فیصد بیماریاں ایسی ہیں

جن کے لئے کسی ڈاکٹر یا کسی حکیم کی ضرورت پیش آسکتی ہے کہنے کا مطلب ہے کہ آپ کی جو بیماریاں ہیں انہیں آپ خود ہی ٹھیک کرسکتے ہیں لیکن ہم لوگوں کو صرف آج کل کی دوائی لینے کی عادت پڑ گئی ہے کیونکہ یہ لینا ایک تو ہمیں آسان لگتا ہے اور دوسرا ایک دم سے آرام آجاتا ہے لیکن ایک دم سے آرام نہیں آتا بلکہ ایک دم سے وہ بیماری دب جاتی ہے نیچرل طریقےسے اگر آپ علاج کرتے ہیں تو اس علاج میں تھوڑا وقت لگ سکتا ہے لیکن بیماری کا علاج جڑ سے ہوتا ہے علاج جڑ سے کرنا بہت ہی ضروری ہے یہ میں آپ کو مثال کے ذریعے سمجھاتا ہوں مان لیجئے آپ کے سر میں درد ہے اور آپ نے آج کے میڈیکل سائنس سے پین کلر لے لیا ہوگا کیا کہ آپ کا سردرد صرف دومنٹ میں ٹھیک ہوجائے گا لیکن وہ سردرد ٹھیک نہیں ہوگا آپ کا نروس سسٹم آپ کو یہ بتانا بند کردے گا کہ آپ کو سر درد ہورہا ہے لیکن اصل میں سردرد تووہیں کا وہیں رہتا ہے آپ کا صرف نروس سسٹم سن ہوجاتا ہے اور آگے چل کر یہ مسئلہ مائیگرین کے مسئلے میں بدل جاتی ہے اور پھر آپ سے زیادہ اور پیسہ چارج کیاجاتا ہے مائیگرین کو ٹھیک کرنے کے لئے۔اللہ ہم سب کا حامی وناصر ہو۔آمین

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *